article2-200x200

انسان کائنات اور اعداد

بسم اللہ الرحمن الرحیم

وسخرلکم الیل والنھار والشمس والقمر والنجوم مسخرات بامرہ ان فی ذالک لایت لقوم یعقلون (سورۃ نحل آیت 12)

ترجمہ: اسی نے تمہارے واسطے رات کواور دن کو اور سورج اور چاند کو (تمہارا) تابع بنادیا ہے اور ستارے بھی اسی کے حکم سے (تمہارے) فرماں بردار ہیں۔بیشک اس میں سمجھدار لوگوں کے واسطے (قدرت خدا کی) بہت سی نشانیاں ہیں۔
قارئین کرام السلام علیکم! حمد و ثنا ہے اُس ذات باصفات کیلئے اور بے حساب دُرود وسلام آئمہ طاہرینؑ کی ذات صفات پر میں بے حد مشکورہوں قارئین امامیہ جنتری کا جنھوں نے بذریعہ ٹیلیفون، خطوط و بالمشافہ میرے سابقہ مضامین کو سراہا اور میری حوصلہ افزائی کی بالخصوص اُن قارئین کا جنھوں نے بغیر کسی غرض و غائیت کے دنیا کے طول عرض سے مضمون پر اپنی پسندیدگی کا اظہار کیا اور مجھے صحیح معنوں میں امامیہ جنتری کی مقبولیت کا اندازہ ہوا۔ بلاشبہ امامیہ جنتری انگلینڈ، امریکہ، دوبئی، سعودیہ، انڈیا، الغرض دنیا میں جہاں جہاں بھی مومنین کرام ہیں اُن میں مستند اور مقبول عام ہے۔
قارئین کرام مضمون کی طوالت کے خوف سے پچھلا مضمون مختصر مگر جامع انداز میں پیش کیا پھر بھی مضمون کے کچھ گوشے مکمل طور پر احاطہ تحریر میں نہ آسکے آج اُن پر بھی روشنی ڈال رہا ہوں گذشتہ مضمون کی آخری سطور میں لکھا تھا کہ جو لوگ کسی بھی ستارے کے نحس اثرات سے متاثر ہو رہے ہوں وہ ستارے کی نسبت سے ورد خاص کو اپنا معمول بنا لیں۔ انشاء اللہ بطفیل چہار دہ معصومین و نحوست سیارگان سے محفوظ رہیں گے۔ گذشتہ سال جن لوگوں نے اپنے مسائل کیلئے رجو ع کیا ان میں سے 90فیصد لوگ نحوست سیارگان سے متاثر ہو رہے تھے۔ جیسا کہ ارباب علم و دانش جانتے ہیں۔ زحل جو کہ ایک نحس اکبر ستارہ تقریبا ڈھائی سال برج اسد میں بحالت وبال قیام پذیر رہا ہے۔ گذشتہ سال برج ، سرطان اسد، سنبلہ والے بوجہ ساڑھ ستی اور برج جدی اور دلوا والے زحل کے تحت ہونے کی وجہ سے انتہائی متاثر ہوئے۔ اس کے علاوہ زحل باقی بروج کے حامل لوگوں کو بھی کسی نہ کسی طرح متاثر کر چکا ہے کیونکہ ان کے زائچہ کے مختلف گھروں میں زحل کی بحالت وبال موجودگی اپنے نحس اثرات مرتب کرتی رہی ہے۔ اور امسال 19 دسمبر2007ء سے 5جنوری2009ء تک مشتری برج جدی میں قیام پذیر ہو گا جو کہ اس کا( ہیوطی گھر) ہے۔ اب باوجود سعد اکبر ہونے کے یہ اہل دنیا پر نحس اثرات مرتب کرے گا۔ یہ دونوں سیارگان زحل و مشتری تو سست رفتار ہیں۔ مگر دوسرے سیارگان مثلاً شمس، قمر، عطارد، زہرہ، مریخ وغیرہ تیز رفتار ہونے کی وجہ سے ایک سال میں کوئی حالتوں سے گزرتے ہین جن میں شرف و ہبوط ، طرح، فرح، حضیض، اوج اور وبال وغیرہ شامل ہیں۔ ان حالتون سے گزرتے ہوئے یہ اہل دنیا پر سعد و نحس اثرات مرتب کرتے ہیں جو ہمارے دنیاوی معاملات میں اتار و چڑھاؤ کا باعث ہیں۔

ان سیارگان کی نحوست سے بچاؤ کیلئے آج جو دعا آپ خدمت میں پیش کر رہا ہوں یہ بلاشبہ مخدومہ کونین سیدہ فاطہ زہرہؑ کی خاص عطا ہے۔ کیونکہ یہ دعا مجھے2007ء میں عطاء ہوئی جو کہ اپنے عدد صغیر 9کی نسبت سے سال فاطمہ ؑ تھا۔ جن احباب نے2007ء کا مضمون کسی وجہ سے نہیں پڑھا ان سے گزارش ہے کہ وہ گزشتہ مضمون ضرور پڑھ لیں تاکہ اس مضمون کو سمجھنے میں آسانی ہو ۔ اس سے ملتی جلتی دعائیں قارئین نے پڑھی ہوں گی۔ مگر یہ بلاشبہ ان سے ممتاز و جدا ہے۔ اس دعا میں اسماء حسنہ ایک خاص ترتیب سے آئے ہیں جو انہی سیارگان سے نسبت رکھتے ہیں۔ بیشتر عاملین و کاملین ان اسماء حسنہ کو شرفات کواکب کے اوقات میں مدد لی جاسکتی ہے۔ اس دعا کی تیسری اور سب سے ممتاز بات یہ ہے کہ دعا کے آخرے میں چہادہ معصومین ؑ کی ذات اعلیٰ صفات کا اجابت دعاکیلئے توسل بنایا گیا ہے اور یہ تو اغیار نے بھی مانا ہے کہ ان کے توسل سے مانگی دعائیں کبھی بھی بارگاہ الٰہی سے شرف قبولیت کے بگیر نہیں لوٹتیں۔ مضمون کو مختصر کرتے ہوئے آپ کو اس دعا سے استفارہ کا طریقہ کار بتا تاہوں سب سے پہلے دعا کے اعداد قمری کا مجومعہ نکال کر نقش مربع آتشی چال سے خالص چاندی پر ایک لوح تیار کریں لوح کے ارد گردچہاردہ معصومین ؑ کے نام لکھیں۔ لوح کسی بھی سعد ستارے کی سعد نظرات یاشرف واوج وغیرہ کے اوقات میں تیار کی جا سکتی ہے۔ بوقت تیاری جن ستارون کی نظرات پر کام کریں۔، ان سے متعلقہ نجورات و صدقات ضرور استعمال کریں آپ کی سہولت کیلئے دعا کے اعداد قمری سے مرتب شدہ نقش ساتھ دے رہا ہوں۔
نقش کے کل اعداد20275ہیں ان میں سے 30قانون کے نفی کر دیں۔ 20245=30-20275باقی اعداد کو چار پر تقسیم کر دیں۔ بعد از تقسیم کے اعداد کو خانہ اول میں لکھ کر چال کے مطابق ایک ایک کا اضافہ کر یں۔ خانہ نمبر13میں کسر کی وجہ سے دو اعداد اضافہ کرکے نقش مکمل کریں۔ بعد ازاں نقش کے اعداد کو چاروں طرف سے جمع کر کے نقش کے صحیح ہونے کا یقین کر لیں۔، بعد از تیاری نقش کو سامنے رکھ کر 90یوم بلاناغہ90مرتبہ یہی دعائیں پڑھیں اور 90دن یہی عمل روانہ نو مرتبہ ورد اپنا معمول بنالیں۔ روز اول عمل شروع کرنے سے قبل دو رکعت نماز حاجات چہادہ معصومین علیھم السلام برائے قبولیت عمل پڑھیں اور کسی بھی میٹھی چیز پر نذر دلوائیں۔ بعد ازاں عمل شروع کریں انشاء اللہ بطفیل چہاردہ معصومین علیھم السلام آپ ہر قسم کی نحوست سیارگان سے محفوظ رہیں گے۔ مضمون کی ہر ممکن وضاحت کر دی گئی ہے اگر کوئی بات سمجھ نہ آئے تو بذریعہ ٹیلی فون پوچھ سکتے ہیں۔

Graphic1